اسلامی حکومت کا قیام ہی تمام مسائل کا حل ہے۔ دردانہ صدیقی 

نصب العین کے حصول کے لیے تربیت کی بنیاد ایمانیات ہے۔ بحیثیت سیکریٹری جنرل حلف اُٹھانے کے موقع پر خطاب

38

عائشہ منور نے حلف لیا، تقریب حلف برداری سے سابق سینیٹر کوثر فردوس نے بھی خطاب کیا۔ ناظمات صوبہ و دیگر ذمہ داران کی شرکت

 

کراچی: نصب العین کے حصول کے لئے ہماری تربیت کی بنیاد ایمانیات ہے۔ خود احتسابی اور جواب دہی کا احساس انسان کو خود پرستی اور زر پرستی سے محفوظ رکھتا ہے۔جماعت اسلامی کے ذریعے اللہ نے ہمیں ایک گراں بار ذمہ داری پر فائز کیا ہے اس ذمہ داری کا حق ایک دوسرے کا دست و بازو بن کر ہی ادا کرنا ممکن ہے۔

 

ان خیالات کا اظہار حلقہ خواتین جماعت اسلامی کی سیکرٹری جنرل دردانہ صدیقی نے نو منتخب سیکریٹری جنرل حلقہ خواتین کی حیثیت سے حلف اٹھاتے ہوئے اپنے خطاب میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کی بے جا محبت،مال کی بے جا ہوس اور مادہ پرستی نے کرپشن اور بدعنوانی کے زہر سے دنیا کو جہنم بنا دیا ہے

 

جبکہ خود احتسابی اور جواب دہی کا احساس انسان کو خود پرستی اور زر پرستی سے محفوظ رکھتا ہے اور اسی میں ہماری دائمی فلاح ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جماعت اسلامی عورت کے اصل مسائل اور ان کے شرعی حقوق،عزت و عصمت کے تحفظ کی جدوجہد کررہی ہے۔

 

یاد رہے کہ جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سینیٹر سراج الحق نے سیشن 2020-2023 کے لیے دردانہ صدیقی کو حلقہ خواتین جماعت اسلامی پاکستان کی مرکزی سیکرٹری جنرل مقرر کیا ہے۔ ان کی تقریب حلف برداری آج مرکزی دفتر الفلاح کراچی میں منعقد ہوئی۔

 

سابق سیکرٹری جنرل حلقہ خواتین جماعت اسلامی عائشہ منور نے حلف لیا۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں سابق سیکریٹری جنرل و سابق سینیٹر ڈاکٹر کوثر فردوس نے کہا کہ باہمی مشاورت تحریکی زندگی کی جان ہے۔صالح افراد کی تلاش،تیاری اور تربیت احیائے دین کا اہم فریضہ ہے۔

 

محض دعوت و تبلیغ کے ذریعے معاشرے کی اصلاح ممکن نہیں بلکہ اسکے لئے قانون حکومت اور اقتدار کی قوت درکار ہوتی ہے

 

لیکن امت مسلمہ کی مقتدر قوتوں کی ترجیحات میں اسلام کا قیام شامل نظر نہیں آتا، اسلامی حکومت کا قیام ہی تمام معاشرتی مسائل کا حل ہے۔

 

حلف برادری کی تقریب میں ناظمات صوبہ، ناظمہ لاہور، ناظمہ کراچی، اراکین مرکزی شوریٰ، نگراں شعبہ و ادارہ جات اور برادر تنظیمات کی صدور شریک ہوئیں.